32

زیادہ وزن والے افراد کیلئے وارننگ

اسلام آباد (سٹیٹ ویوز)متوازن غذا اور ورزش صحت مند زندگی کی علامت سمجھی جاتی ہے لیکن آج کل کے مصروف دور میں دونوں چیزوں پر توجہ کم دی جارہی ہے جس کے باعث موٹا پے کی بیماری نہ صرف عام ہورہی ہے بلکہ کسی حد تک لوگوں کیلئے خطرناک بھی بن چکی ہے .

آج کل موٹاپے کو ایک عام بیماری تصور کیا جاتا ہے اوردنیا میں ہر دوسرا انسان موٹاپے کا شکار ہے.

زیادہ وزن والے افراد میں زیابطس اور ہائی بلڈ پریشرکے علاوہ بہت سی دوسری بیماریوں کا خدشہ بڑھ جاتا ہے.زیادہ وزن والے افراد بہت سست رہتے ہیں۔ اس کی وجہ غیر متوازن غذا اور ورزش نہ کرنا ہے۔

نفسا نفسی کے اس دور میں ہر انسان بس دوسرے سے آگے بڑھنے کی دوڑ میں لگا ہوا ہے صحت کی طرف توجہ دینا ہی بھول گیا ہے۔لیکن اب موٹاپے کے شکار افراد کو پریشان ہونے کی ضروت نہیں اگر وہ 24 گھنٹوں میں سے تھوڑا وقت بھی اپنے لیے نکال لے تو موٹاپے سے بچا جا سکتا ہے۔

زیادہ وزن والے افراد اگر روزانہ صبح اٹھ کر ۰۲ منٹ بھاگیں اور ساتھ ہے ساتھ اگر وہ اپنی ڈائٹ کا بھی مکمل خیال رکھیں تو وہ اس موٹاپے سے چھٹکارا حاصل کر سکتے ہیں۔اس کے علاوہ ورزش آپ کے جسم کو ٹھوس بناتی ہے آپ کی عمر بڑھنے کے عمل کو گھٹاتی ہے جوڑوں کی تکلیف کے عمل کو ختم کرنے میں زبردست کردار ادا کرتی ہے گردوں کو بہتر کام کرنے کے قابل بنا تی ہے اور آپ صحت مند اور تندرست محسوس کرنے لگتے ہیں۔