پاکستان میں ہر سال 5ہزارخواتین قتل ہوتی ہیں

اسلام آباد (سٹیٹ ویوز) پاکستان میں غربت کے خاتمے کیلئے کام کرنے والی تنظیم پاکستان پوورٹی ایلیویشن فنڈز(پی پی اے ایف) کے سی ای او قاضی عظمت عیسیٰ نے بتایا کہ ہیومین رائٹس واچ کے تخمینے کے مطابق پاکستان میں گھریلو تشدد کے باعث ہر سال 5 ہزار خواتین قتل ہو جاتی ہیں۔
پاکستان پوورٹی ایلیوی ایشن فنڈز نے صنفی بنیاد پر تشدد کیخلاف 16 روزہ مہم کے اختتام پر مقاصد کے حصول کیلئے پینل مباحثے کا اہتمامکیا۔ مختلف تنظیموں سے تعلق رکھنے والی ماہرین نے پائیدار ترقیاتی اہداف کے حصول اور خواتین و بچیوں کیلئے صنفی برابری اور بااختیار بنانے کیلئے طریقہ کار پر روشنی ڈالی۔

پی پی او کے سی ای او قاضی عظمت عیسیٰ نے عالمی صورتحال اور پاکستان میں حالات سے متعلق روشنی ڈالی اور بتایا کہ ہیومن رائٹس واچ کے تخمینے کے مطابق پاکستان میں 70 فیصد خواتین تشدد کا نشانہ بنتی ہیں اور گھریلو تشدد کے باعث پر سال 5 ہزار خواتین قتل ہو جاتی ہیں ۔ عالمی سطح پر بھی ہر 3میں سے ایک خواتین تشدد کا شکار ہے۔

پاکستان پاورٹی ایلیوی ایشن فنڈز کی سینئر گروپ ہیڈ گرانٹس مس سیمی کمال ، فارمرز ڈیولپمنٹ آرگنا ئزیشن کے ایگزیکٹو ڈائریکٹر غلام مصطفی ، یونیسف کی چائلڈ پروٹیکشن اسپیشلٹ مس مقدسہ مہرین اور پی ٹی وی ہوم کے آٹی منیجر اظہر حفیظ پینل میں شامل تھے