منرل واٹرکے نام پر کہیں آپ زہر تو نہیں پی رہے؟ خوفناک انکشافات

کراچی(سٹیٹ ویوز) پاکستان کونسل برائے تحقیقات آبی وسائل نے اپنی سہ ماہی رپورٹ جاری کر دی ہے۔ رپورٹ کے مطابق ملک بھر میں فراہم کیا جانے والا مختلف برانڈز کا بوتل بند پانی کیمیائی اور جراثیمی طور پر آلودہ پایا گیا ہے۔ پانی میں سنکھیا کی مقدار بھی پائے جانے کا انکشاف ہوا ہے، جس سے پھیپھڑوں، مثانے، جلد، گردے، ناک اور جگر کا کینسر اور کئی بیماریاں پھیلنے کا خدشہ ہے..

۔پاکستان کونسل برائے تحقیقات آبی وسائل حکومت پاکستان وزارت سائنس و ٹیکنالوجی کی ہدایت پر بوتلوں میں بند پانی کی کوالٹی کی مانیٹرنگ ایجنسی کے طور پر کام کر رہی ہے۔ سہ ماہی رپورٹ میں اسلام آباد، راولپنڈی، سیالکوٹ، پشاور، ملتان، لاہور، کوئٹہ، بہاولپور، ٹنڈو جام، کراچی اور مظفر آباد سے بوتل بند / منرل پانی کے 104 برانڈز کے نمونے کیمیائی اور جراثمی طور پر آلودہ پائے گئے۔ ان میں 4 نمونوں میں سنکھیا کی مقدار اسٹینڈرڈ سے زیادہ (14 سے لے کر 27 پی پی بی) تک تھی جب کہ پینے کے پانی میں اس کی حد مقدار صرف 10 پی پی بی تک ہے۔