سینے سے باہر نکلا ہوا دل

ماسکو ( مانیٹرینگ ڈیسک ) سات سالہ روسی بچی ویرسافیا بورن روس سے تعلق رکھتی ہے اور اس کا دل پیدائش کے وقت سے ہی سینے سے باہر ہے ۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ دنیا بھر میں ہر 10 لاکھ میں سے صرف 5 افراد ہی اس مسئلے سے دوچار ہوتے ہیں۔ ویرسافیا بورن نے برطانوی نشریاتی ادارے سے گفتگو کرتے ہوئے اپنے دل کی طرف اشارہ کیا اور کہا یہ رہا میرا دل، میں اس طرح جینے والی واحد انسان ہوں۔ میں چل سکتی ہوں ، اچھل سکتی ہوں یہاں تک کہ دوڑ بھی سکتی ہوں مگر میری خواہش ہے کہ میں خوب تیز چل سکوں اور اڑان بھروں۔
بچی کی ماں کا کہنا ہے کہ میں نے پہلی مرتبہ اس کے دل کو سینے سے باہر دیکھا تو بہت تکلیف پہنچی تاہم کم از کم وہ سانس لے سکتی تھی جس کا مطلب تھا کہ وہ جینے کی قدرت رکھتی ہے۔ میری بیٹی کا سینے کے باہر دل کے ساتھ مناسب طور پر جینا ممکن نہیں ہے اس لیے کہ اس کی حالت کو ممکنہ طور پر خطرات درپیش رہتے ہیں، لہٰذا اس کی انتہائی دیکھ بھال کی ضرورت ہوتی ہے۔
روس میں سینے سے باہر دل والی بچی ویرسافیا بورن کا علاج ممکن نہیں ہے اس لیے اسے امریکہ لے جایا گیا ہے جہاں اس کا باقاعدہ آپریشن کیا جائے گا