فیصل راٹھورنےوزیرحکومت چوہدری عزیزکی یادگاربنانےکااعلان کردیا

اسلام آباد (سٹیٹ ویوز/سٹاف رپورٹر) سیکرٹری جنرل پاکستان پیپلزپارٹی آزاد کشمیر و سابق وزیر برقیات و اکلاس فیصل ممتاز راٹھور نے کہا ہیکہ نواز لیگ کی حکومت گڈ گورننس کے نام پر عوامی حقوق پر ڈاکہ ڈال رہی ہے۔

ڈیڑھ سالہ کارکردگی انتقامی کاروائیوں ، لوٹ مار کے علاہ کچھ نہیں۔ انہوں نے کہا کہ وزیر تعمیرات نے پہلے ہی بیتاڑ ہائیڈرل پاور پراجیکٹ کا بیڑہ غرق کیا اب خلاف میرٹ ایک ہی قبیلہ سے پچیس تقریاں کر کے فاروق حیدر کے میرٹ کے نعرہ کو عملی طور پر دفن کردیا۔

وزیر حکومت ایم ۔ڈی کے آفس میں بیٹھ کر جعلی آرڈر جاری کروائے تو پھر میرٹ کہاں رہ جاتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے حکومت کو اصلاح احوال کا موقع دیا لیکن حکومت نے لاقانونیت اور اقربا پروری کی انتہاء کردی وزراء ہردن کو آخری سمجھ کر لوٹ رہے ہیں لوکل گورنمنٹ کے کروڑوں روپے ہڑپ کرلیے گئے۔

حویلی کے ایم ایل اے نے نو کروڑ ڈھکارنے کیلے محکمہ شہرات کی ڈوزر مشین سے اپنےبیٹےکوڈوزر آپریٹر بنا دیا ہے۔ مناسب ہوتا کہ چیرمین احتساب بیورو حویلی میں جاکر فوٹو سیشن کرنے کےبجائے لوکل گورنمنٹ کے نو کروڑ کا حساب مانگتے۔

محکمہ تعمیرات کرپشن کا گڑھ بنا ہوا ہے باقی حلقوں میں پندرہ کلو میٹر سڑکیں دیں گئیں لیکن حویلی کا بزدل وزیر سڑکوں کے بجٹ سے ایک غیر ضروری پل بنا ررہا ہے ، اگر پل بن گیا تو اقتدار میں آکر اس پل کے ساتھ موصوف کی بزدلی کی یادگار بنواؤں گا تاکہ اسکی نسلیں یاد رکھیں کہ بزدلوں کی فہرست میں چوہدری عزیز کا پہلا نمبر تھا۔ فیصل راٹھور نے پیپلز سیکرٹریٹ میں کارکنوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ فیصل ممتازراٹھور نے کہا کہ حکومت مسائل حل کرنے کے بجائے مسائل پیدا کر رہی ہے۔ تعلیمی پیکج سپریم کورٹ کے فیصلہ کی روح کے مطابق بحال نہیں کیا گیا ۔

اکلاس سمیت تمام ملازم ہڑتال پر ہیں لیکن حکومت ان کے مطالبات ماننے میں سنجیدہ نہیں بلکہ اس آڑ میں وزراء اکلاس کے اثاثوں کی بندربانٹ کرنے پر تلے ہوئے ہیں۔ انہوں نے انکشاف کیا کہ وزیر تعمیرات میرپور میں واقع محکمہ اکلاس کا پلاٹ اپنے ایک پارٹنر کے نام پر نیلام کروانے کیلئے وزیر اعظم کو شیشے میں اتارنے کی کوشش کر رہے ہیں اس کیلیےانہوں نے وزیر اعظم سیکرٹریٹ میں وزیر اعظم سے ون آن ون ایک گھنٹہ کی ملاقات بھی کی لیکن امید ہے کہ فاروق حیدر موصوف کے ماضی سے واقف ہونگے اوراپنی عزت پر حرف نہیں آنے دیں گے۔

وزراء وزیر اعظم سے خلاف قانون کام کروا کر عدم اعتماد کا جواز بنانا چاہتے ہیں۔وزیر اعظم کو ان آستین کے سانپوں سے ہوشیار رہنا ہوگا ورنہ پیپلز پارٹی مزید موقع نہیں دے گی۔ انہوں نے کہا کہ محکمہ اکلاس کے اثاثے نیلام کرنے کے بجاے انہیں بہتر طور پر استعمال میں لانے کی ضرورت ہے تاکہ محکمہ اپنے پاؤں پر کھڑا ہو سکے۔ فیصل ممتاز راٹھور نے کہا کہ نواز شریف کے دورہ مظفرآباد سے حکمرانوں کی چاندی ہو گئی۔

پہلے دن ہی ایڈمنسٹریٹرز کو بلا کر ان کو دو دو لاکھ کی پھکی دی گئی میں انکے ساتھ اظہار افسوس کرتا ہوں کیونکہ شاہد یہ دو دو لاکھ پورا کرنے سے قبل ہی گھر چلے جاہیں فیصل ممتاز راٹھور نے کہا کہ آزاد کشمیر احساس خطہ ہے نواز شریف وہاں عدالت عظمیٰ پاکستان اور اداروں کے خلاف ہرزا سرائی کریں گے تو مناسب نہیں ہوگا۔

نون لیگی حکومت کو چاہیے کہ ایک نااہل شخص کو قومی اداروں کے خلاف مہم جوئی کی آزادکشمیر کی سرزمین پر اجازت نہ دیں ورنہ کل وہاں بھی بلوچستان جیسے حالات پیدا ہو سکتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ پیپلزپارٹی کی قیادت نے پانچ فروری کو کشمیریوں سے یکجہتی کیلیے لاہور میں جلسہ کا اعلان کرکے ہمارے دل جیت لیے اانشااللہ پانچ فروری کو سارا لاہور کشمیر۔کشمیر بولے گا۔