پیرس میں شدید برف باری نے تمام ریکارڈ توڑ دیئے

پیرس(نیوز ڈیسک ) پیرس اور گردونواح میں شدید برفباری ، ماہرین کا خیال یے کہ پیرس میں اس طرح کی شدید برفباری قریبا تیس سال بعد ہوئی یے۔

سردی کی شدت سے درجہ حرات گر گیا اور امکان ظاہر کیا جارہا یے کہ بدھ اور جمعرات کی درمیانی شب پیرس اور گردونواح میں درجہ حرارت منفی دس گر سکتا یے۔ شدید برفباری کے باعث نظام زندگی مفلوج ہو کر رہ گیاہے۔

فرانسیسی میڈیا کے مطابق برفباری کی وجہ سے ائیر فرانس کی متعدد پروازیں منسوخ ہوئیں اور اسی طرح پیرس میں لوکل ٹرانسپورٹ بھی سخت متاثر ہے۔

سڑکوں پر جمی برف کے باعث بسیں بھی سڑکوں پر نظر نہیں آرہی اور اسی طرح ٹرین پٹریوں پر جمی برف نے ٹرین کے نظام کو بھی متاثر کیا۔ منگل اور بدھ کی درمیانی شب برفباری نے تو حد ہی کر دی ،

کہیں پر برف کی مقدار بارہ سنٹی میٹر اور کہیں پر پندرہ سنٹی میٹر تک ریکارڈ کی جانے کی خبریں ہیں۔بدھ کے روز مشینری کے ذریعے سڑکوں سے برف ہٹانے کا کام جاری رہا ، اب کہیں کہیں گاڑیاں سڑکوں پر نظر آنے لگی ہیں

لیکن معمول کی ٹریفک اب بھی بحال نہیں ہوئی۔ برفباری نہ صرف پیرس میں ہوئی بلکہ فرانس کے شمالی اور سنٹر ریجن میں خوب سفیدی چھائی یے اور ہر طرف برف کے ڈھیر ہی ڈھیر ہیں۔

برفباری کے ان ڈھیروں کو بچے تو بہت ہی پسند کر رہے ہیں اور انہیں برف میں کھیلنے کا خوب لطف آتا یے تاہم سڑکوں پر جمی برف سے سفری مشکلات سے بچے نہیں تو البتہ بڑے ضرور پریشان ہیں جو اپنے کام کاج کے لئے گاڑیوں میں سفر کرنا چاہتے ہیں