CPEC

سی پیک پرکام کرنےوالےچینی انجینئرزکی پولیس سےہاتھا پائی

کبیروالہ، خانیوال (آن لائن) سی پیک پر کام کرنے والے چینی انجینئرز کا پولیس سے جھگڑا ہوگیا اور نوبت ہاتھا پائی تک جاپہنچی.

کبیروالہ میں پاک چین اقتصادی راہداری (سی پیک) میں شامل ایم فور موٹروے نور پورسائٹ پر پولیس اور چینی باشندوں میں جھگڑا ہوگیا۔ چینی شہریوں نے بغیر سیکورٹی کیمپ سے باہر جانے کی کوشش کی تو پولیس نے ان کی حفاظت کے پہلو سے انہیں روکا۔ اس پر چینی باشندے برہم ہوگئے اور اپنی حفاظت پر مامور پولیس اہلکاروں سے الجھ پڑے۔اس دوران غیر ملکیوں اور پولیس میں ہاتھا پائی ہوئی۔ پراجیکٹ انجینئر ڈینی نے پولیس اسکواڈ کے انچارج لطیف کو کرسی اٹھا کر ماردی جب کہ ایک چینی باشندہ پولیس موبائل پر چڑھ کر کھڑا ہوگیا۔ چینی ملازمین نے اشتعال انگیزی کا مظاہرہ کرتے ہوئے پولیس کیمپ کی بجلی بھی کاٹ دی۔

پولیس نے صورتحال کو کنٹرول کرنے کےلئے چینی شہریوں کو کیمپ میں بند کرکے باہر سے تالے لگادیئے۔ واقعے کی اطلاع ملتے ہی اسسٹنٹ کمشنر کبیروالہ اور ڈی ایس پی موقع پر پہنچ گئے اور بات چیت کرکے معاملے کو حل کرنے کی کوشش کی۔ تاہم چینی ملازمین نے مذاکرات سے انکار کردیا اور حالات بدستور کشیدہ ہیں۔واضح رہے کہ غیرملکی انجینئرز فیصل آباد ملتان موٹروے پراجیکٹ پر کام کررہے ہیں۔