syed-nazir-gilani

کشمیر اور بدلتی عالمی سیاست

اقوام متحدہ
مصر کی گبھراہٹ اور اسرائیل نوازی بھی کام نہ آئی

آج جمعہ 23 دسمبر 15 رکنی سلامتی کونسل میں فلسطینی عوام کو ایک بہت بڑی کامیابی حاصل ہوئی ۔

اسرائیل کو اس کے ہمدرد اور حامی ممالک بالخصوص امریکہ 14 ممالک کی مشترکہ تنبیہ سے نہ بچا سکے ۔ سلامتی کونسل کی قرارداد میں اسرائیل کو فلسطینی علاقوں میں تعمیراتی کام روکنے کو کہا گیا ہے ۔

آج کے ووٹ کی خاص بات یہ رہی ہے کہ امریکہ نے اپنے ویٹو Veto کے استعمال سے اسرائیل کو بچانے کی روش سے پرہیز کیا ۔

عددی برتری اور بدلتی عالمی اخلاقیات کا احساس امریکہ کو ہونے لگا ہے ۔

یہ تبدیلی کشمیریوں کے حق خودارادیت کے کیس کے لئے حوصلہ افزا ہے ۔

امریکہ کا کشمیری عوام کے حق خودارادیت کی حمایت کا اچھا ریکارڈ رہا ہے ۔

ہمیں روس کو بدلتی عالمی سیاست اور اخلاقیات کا احساس دلاتے ہوئے روس کے استعمال کئے گئے ویٹو کو کشمیر میں روا بھارتی ظلم و تشدد کی بڑی وجہ ثابت کرنا ہوگا۔

دنیا بدل رہی ہے اور ہمیں اس تبدیلی میں اپنے حصے کا مطالبہ کرنا ہوگا ۔

It is the first resolution the Security Council has adopted on Israel and the Palestinians in nearly eight years.
The resolution was put forward at the 15-member council for a vote on Friday by New Zealand, Malaysia, Venezuela and Senegal a day after Egypt withdrew it under pressure from Israel and US President-elect Donald Trump. Israel and Trump had called on the United States to veto the measure.

اپنا تبصرہ بھیجیں