Naary Against Imran Khan

نئے پاکستان میں بھی ”گوعمران گو“ کے نعرے لگ گئے!!

ڈیری غازی خان (نیوز ڈیسک ) وزیر مملکت زرتاج گل انتخابات کے بعد پہلی بار اپنے حلقے میں گئیں۔زرتاج گل نے اپنے حقلے میں کھلی کچہری لگائی تاہم اس دوران “گو عمران گو ‘ کے نعرے لگ گئے۔تفصیلات کے مطابق پاکستان تحریک انصاف نے حکومت میں آنے سے پہلے گو نواز گو کے خوب نعرے لگائے یہاں تک کے گو نواز گو پر نغمے بھی بنا دئیے۔
تاہم اب اسی رویے کا سامنا تحریک انصاف کو بھی کرنا پڑ رہا ہے۔میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف کی خاتون وزیر زرتاج گل آج الیکشن جیتنے کے بعد پہلی بار اپنے حلقے میں گئیں اور کھلی کچری لگائی تاہم اس دوران لوگ شدید برہم ہوئے اور “گو عمران گو’ کے نعرے لگا دئیے۔لوگوں نے عہدے پورے نہ ہونے پر وزیراعظم عمران خان کے خلاف نعرے لگائے جب کہ زرتاج گل حالات کو دیکھتے ہوئے وہاں سے چلتی بنی۔

خیال رہے تحریک انصاف کو حکومت میں آنے سے پہلے بھی ایسے نعروں کا سامنا کرنا پڑتا رہا ہے۔سابق زیراعلیٰ پرویز خٹک کو اپنے حلقے کا دورہ مہنگا پڑ گیا ،ْپرویز خٹک غلہ ڈھیر میرہ پہنچے تو مقامی افراد نے سیاہ جھنڈے لہراتے ہوئے اپنے غصے کا اظہار کیا ،ْمقامی افراد نے وزیراعلیٰ کے سامنے شکایات کے انبار لگاتے ہوئے اپنے مطالبات پیش کیے۔رویز خٹک کی انتخابی حلقے میں آمد پر لوگوں نے شدید احتجاج کرتے ہوئے ’’گو پرویز گو ‘‘ گو عمران گو ‘‘ کے نعرے لگائے ۔

مظاہرین نے پی ٹی آئی کے جھنڈے نذر آتش کر دیئے ،۔جب کہ ایسی ہی صورتحال کا سامنا اور بھی کئی پی ٹی آئی رہنماؤں کو کرنا پڑا تاہم یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ تحریک انصاف کے چئیرمین عمران خان نے ہی لوگوں کو یہ شعور دیا کہ وہ حکمرانوں سے کارگردگی کا حساب مانگیں اور یہی وجہ ہے کہ جب تحریک انصاف خود عام سے کیئ وعدے بھول گئی تو انہیں بھی اپنے لیڈر کے خلاف نعرے برداشت کرنے پڑے۔

مزید پڑھیں

کرکٹ‌کی تاریخ‌کا سنسنی خیز ون ڈے میچ–پاکستان کے 51 رنز پر 7 کھلاڑی آؤٹ ہو گئے -پھر کیا ہوا؟جانیے