گورنر ہاوس لاہور کی ٹوٹی دیواریں قومی خزانے پر بوجھ بن گئیں

لاہور (ویب ڈیسک) گورنر ہاؤس کی گری ہوئی دیوار پر سکیورٹی کی مد میں لاہو رپولیس کو ماہانہ چھ لاکھ روپے کا ٹیکہ، 12جوان اور تین اے ایس آئی گورنر ہاؤس کی ٹوٹی دیوار پر تعینات۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق گورنر ہاؤس کی دیوار ٹوٹنے اور عدالت کے حکم پر کام وہیں روکنے کے بعد ٹوٹی ہوئی دیوار پر تین شفٹوں میں پولیس کی نفری تعینات کرنے سے لاہور پولیس کو ماہانہ چھ لاکھ کا ٹیکہ لگ رہا ہے کیونکہ لاہور پولیس کے 12 جوان اور تین اے ایس آئی گورنر ہاؤس کی ٹوٹی دیوار پر تعینات ہیں۔

ضلعی انتظامیہ کی جانب سے گورنر ہاؤس کی 60 فٹ کے قریب دیوار کا جنگلہ توڑا گیا تھا۔ اس حوالے سے محکمانہ ذرائع کا کہنا ہے کہ کانسٹیبل کی اوسط تنخواہ 30ہزار روپے اور اے ایس آئی کی 45ہزار روپے ہے اور گورنر ہاؤس کی ٹوٹی ہوئی دیوار پر 3 شفٹوں میں پولیس اہلکار تعینات ہیں جبکہ گورنر ہاؤس کی سکیورٹی اس نفری کے علاوہ خدمات سرانجام دے رہی ہے۔