IMF

آئی ایم ایف کی عالمی مالیاتی بحران کی وارننگ جاری

اسلام آباد ( ویب ڈسک) عالمی مالیاتی ادارے (آئی ایم ایف) نے اقتصادی گروتھ میں کمی کے باعث حکومتوں کو ممکنہ معاشی بحران سے نمٹنے کے لیے تیاری کا مشورہ دے دیا۔

خبررساں ادارے اے ایف پی کے مطابق دبئی میں آئی ایم ایف کی منیجنگ ڈائریکٹر کرسٹین لیگارڈے نے ورلڈ گورنمنٹ سمٹ میں کہا کہ “لب لباب یہ ہے کہ ہم نے جو امید رکھی تھی اس کے مقابلے میں معیشت پروان نہیں چڑھ رہی”۔ واضح رہے کہ گزشتہ ماہ آئی ایم ایف نے فروری 2018 میں عالمی معیشت کی گراوٹ میں 3.7 سے 3.5 فیصد کمی کی پیش گوئی کی تھی۔

کرسٹین لیگارڈے نے ’چار بادل‘ کی اصطلاح استعمال کرتے ہوئے کہا کہ ’چار بادلوں کی وجہ سے عالمی معیشت پروان نہیں چڑھ سکی جس کے نتیجے میں معاشی ’طوفان‘ متاثر کرے گا۔ ان کا کہنا تھا کہ ’تجارتی تناؤ، ٹیرف میں اصافہ، فنانشنل مسائل، بریگزٹ کے غیر تسلی بخش نتائج اور چینی معیشت میں گراوٹ ممکنہ طور پر معاشی رسک میں شامل ہیں۔