پاکستان اورملائشیاء کےدرمیان سرمایہ کاری کے نئےدروازے کھل گئے

کوالالمپور(سیدخالدگردیزی۔سٹیٹ ویوز)پاکستان کی تیسری بڑی چیمبر آف کامرس راولپنڈی نے پاکستان میں ملائشیاءکے سفارتخانے کے ساتھ ملکرملائشیاءکے دارلحکومت کوالالمپورمیں دونوں ممالک میں کاروبار کے مواقعوں کے حوالے سےکانفرنس کا انعقاد کرکے دونوں ممالک کے درمیان سرمایہ کاری کے نئے دروازے کھول دیئے۔

کانفرنس کا آغاز دونوں ممالک کی کاروباری شخصیات نے فیتہ کاٹ کر آج سوموار کو کیا۔قرآن پاک کی تلاوت کےبعد دونوں ممالک کے قومی ترانے بجائےگئے۔ابتدائی خطاب راولپنڈی چیمبرآف کامرس کے صدر ملک شاہد سلیم نے کیا اور کانفرنس کے اغراض ومقاصد بیان کرتے ہوئے کہا کہ اس کانفرنس کے ملائیشا میں انعقاد کی ایک وجہ دونوں ممالک کے درمیان تعلقات ہیں جو دونوں ممالک کے وزراء اعظم کی وجہ سے مزید مضبوط ہورہےہیں۔

دوسری وجہ یہ ہے کہ دونوں ممالک میں کاروبار کے وسیع مواقع ہیں جو اس کانفرنس کے کاروباری شخصیات کے سامنے آئیں گے۔راولپنڈی چیمبر آف کامرس کے گروپ لیڈر سہیل الطاف نے اپنے خطاب میں کہا کہ راولپنڈی چیمبر آف کامرس اپنے ممبران کیلئے ایسے مواقعے پیدا کرتی رہی اورکرتی رہے گی۔انہوں نے امید ظاہر کی کہ دونوں ممالک کی کاروباری شخصیات اس موقع سے بھرپور فائدہ اٹھائیں گی اور باہمی روابط بڑھائے جائیں گے۔پاکستان کے یہاں ملائیشا میں قائمقام ہائی کمشنر میاں عاطف شریف نے بھی خطاب کیا


کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ انہیں خوشی ہے کہ دونوں ممالک کا کاروباری طبقہ آگے بڑھ رہا ہے اور دونوں ممالک میں کاروباری مواقعوں کو دیکھا جارہا ہے۔اس موقع پرپاکستان میں کاروباراور سرمایہ کاری کے مواقعوں کے حوالے سے مختصر فلم بھی دکھائی گئی جس میں اعداد وشمار کی مدد سے تفصیل کیساتھ بتایا گیا کہ پاکستان میں کاروباراورسرمایہ کاری کے مواقع کن سیکٹرز میں موجود ہیں۔اس موقع پر پاکستان میں پٹرولیم کی کمپنی ماری پٹرولیم کے جنرل منیجر اسد ربانی اورآمنہ گروپ آف کمپنیز کی چیف ایگزیکٹو آمنہ ملک نے بھی اپنی اپنی کمپنیز کی سرمایہ کاری۔کارکردگی اور دلچسپی کے امور کے بارے میں بتایا۔

کانفرنس سے پاکستان میں ملائیشا کے سفارتکار اکرام ابراہیم نے یہاں پاکستان سے آئے ہوئے مہمانوں کو خوش آمدید کہا اور اس امر کا اظہار کیا کہ کانفرنس دونوں ممالک کے کاروباری طبقے کیلئے سنگ میل ثابت ہوگی۔اس موقع پر ایگزیکٹو ڈائریکٹر انوسٹمنٹ پروموشن (میڈا)ملائیشا سیوا سوری سندرا راجہ نےبطورمہمان خصوصی شرکاء کو ملائیشا میں کاروبارکے مواقعوں کے بارے میں تفصیل بتائی اور اس معاملے میں ہرطرح کی مدد کیلئے اپنی کمپنی کی خدمات پیش کیں۔

آج سوموار کو کانفرنس کے دوران راولپنڈی چیمبر آف کامرس اور فیڈریشن آف ملائیشا کے درمیان مفاہمت کی یاداشت پر بھی دستخط کئے اور دونوں ممالک کی کاروباری شخصیات کو ایک دوسرے سے گھل مل جانے کا موقع بھی فراہم کیا گیا۔یاد رہے کہ اس کانفرنس کے انعقاد کے لئے راولپنڈی چیمبر آف کامرس کے صدر ملک شاہد سلیم سمیت ایونٹ کیلئے بنائی گئی کمیٹی کے چیئرمین چوہدری ندیم رؤف اور وائس چیئرمین سردار تنویر سرور سمیت انکی ٹیم نے دن رات محنت کی اور کانفرنس کو کامیاب بنایا جسکے دوسرے حصے میں منگل کے روز ملائیشا کے وزیراعظم مہاتیر محمد بطورمہمان خصوصی شرکت کرینگے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں