raja shafiq ahmed

راجہ شفیق احمد کی مقبوضہ کشمیرمیں آرٹیکل 370 اور 35 اے منسوخ کرنے کی شدیدمذمت

اسلام آباد(سٹیٹ ویوز)مسلم لیگ ن اوورسیز کے چیئرمین و میڈیا ایڈوائزر راجہ شفیق احمد نےمقبوضہ کشمیرمیں آرٹیکل 370 اور 35 اے منسوخ کرنے کے فیصلے کی شدیدمذمت کرتے ہوئے اسے ظالمانہ اقدام قراردیاہے۔انہوں نے کہا کہ بھارت کشمیر کے لوگوں سے ان کی خصوصی پہچان چھیننے کی کوشش کررہا ہے آرٹیکل 35 اے جموں و کشمیر کے لوگوں کو مستقل شہریت کی ضمانت دیتا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ بھارت نے مقبوضہ وادی میں38ہزارفوجی مزید بھیج دئیے ہیں جس سے یہ صاف ظاہرہوتاہے کہ بھارت خطہ میں بڑے انسانی قتل عام کی تیاریاں کررہا ہے ۔دفعہ 370 اور 35 اے کی منسوخی سے مقبوضہ کشمیر کی آبادیاتی، جغرافیائی اور مذہبی صورتحال یکسر تبدیل ہوجائے گی۔ مقبوضہ کشمیر کی مسلم اکثریتی حیثیت ختم ہوجائے گی اور وہاں غیر مسلموں اور غیر کشمیریوں کو بسایا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ بھارت عالمی قوانین کی مسلسل خلاف ورزی کر رہا ہے اور بھارتی ہٹ دھرمی سے خطے کا امن تباہ ہو رہا ہے۔اس آرٹیکل کے خاتمے کے بعد اقوام متحدہ کی جموں کشمیر کے حوالے سے ان قرار دادوں کی رہی سہی اہمیت ختم ہونے کا بھی اندیشہ ہے جن کے مطابق جموں کشمیر کو متنازعہ قرار دیا گیا تھا اور پاکستان اور بھارت کو کہا گیا تھا کہ کشمیریوں کو اپنے مستقبل کا فیصلہ کرنے کیلئے رائےشماری کا ماحول بنا کر دیا جائے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں