آصف زرداری کی طبیعت خراب،ہسپتال منتقل

اسلام آباد (سٹیٹ ویوز) : سابق صدر آصف علی زرداری کی ہمشیرہ فریال تالپور کو طبیعت ناساز ہونے پر اسپتال منتقل کر دیا گیا ۔ تفصیلات کے مطابق فریال تالپور کو پولی کلینک اسپتال منتقل کر دیا گیا ہے جہاں ان کا طبی معائنہ کیا جا رہا ہے۔ ذرائع کے مطابق فریال تالپور کو کل رات معدے میں تکلیف کی وجہ سے اسپتال لایا گیا تھا جہاں انہیں آفیسر وارڈ میں رکھا گیا اور ان کاعلاج جاری ہے۔

ذرائع کے مطابق سابق صدر آصف علی زرداری کی ہمشیرہ فریال تالپور قومی احتساب بیورو (نیب) کی حراست میں ہیں اور انہیں احتساب عدالت اسلام آباد نے آج پیش کرنے کا حکم دے رکھا ہے۔ یاد رہے کہ دو ماہ قبل نیب نے بے نامی اکاؤنٹس کیس میں فریال تالپور کو گرفتار کیا تھا۔دو ہفتے قبل انہیں احتساب عدالت میں پیش کیا گیا تھا جہاں ان کا 10 روزہ جسمانی ریمانڈ منظور کر لیا گیا۔

میگا منی لانڈرنگ اورجعلی بینک اکاؤنٹ کیس میں شریک چیئرمین پیپلز پارٹی آصف زرداری اوران کی ہمشیرہ فریال تالپور کے جسمانی ریمانڈ میں یہ چوتھی مرتبہ کی گئی توسیع تھی۔

نیب نے ریمانڈ مکمل ہونے پر سابق صدر اور ہمشیرہ کو عدالت میں پیش کیا اور عدالت سے آصف زرداری کا مزید 10 روزہ جبکہ فریال تالپور کا 5 روزہ ریمانڈ دینے کی استدعا کی۔ آصف زرداری کے وکیل لطیف کھوسہ نے ایک بار پھر زیادہ ریمانڈ دینے کا مشورہ دیتے ہوئے کہا کہ عید کے بعد 19 اگست تک کا ریمانڈ دے دیں۔

فریال تالپورکے وکیل فاروق ایچ نائیک کا کہنا تھا کہ آصف زرداری اور فریال تالپور دونوں کی پیشی ایک ہی روز ہو تو بہتر ہوگا۔ احتسساب عدالت نے آصف زرداری اور فریال تالپور کے جسمانی ریمانڈ میں چوتھی بارتوسیع کرتے ہوئے دونوں کو 8 اگست کو دوبارہ پیش کرنے کا حکم دیا تھا۔

اس سے قبل 15 جولائی کو ہونے والی سماعت میں احتساب عدالت نے آصف زرداری کے ریمانڈ میں 14 روز کی توسیع کی تھی ۔ توسیع کی نیب استدعا عدالت نے منظور کرلی تھی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں