لیڈی ڈاکٹر کے رشتہ داروں کا تیماردار پر تشدد، متاثر نوجوان وینٹی لیٹر پر منتقل

لاہور(نیوزڈیسک) گنگا رام ہسپتال میں مریض کی تیمار داری کے لیے آیا ہوا نوجوان لیڈی ڈاکٹر کے رشتہ داروں کے مبینہ تشدد کی وجہ سے شدید زخمی ہوگیا جبکہ اس کی حالت مزید بگڑنے پر انہیں وینٹی لیٹر پر منتقل کردیا گیا۔

عینی شاہدین نے میڈیا نمائندے کو بتایا کہ سمن آباد کے رہائشی محمد علی نے اپنی دادی کے علاج میں تاخیر کی وجہ سے احتجاج کیا جو لیڈی ڈاکٹر اور اس نوجوان کے درمیان تکرار میں تبدیل ہوگیا۔

انہوں نے مزید بتایا کہ جیسے ہی دونوں کے درمیان لفظی جنگ میں شدت آئی تو لیڈی ڈاکٹر نے اپنے رشتہ داروں کو بلوایا۔

لیڈی ڈاکٹر کے بلانے پر تقریباً 8 سے 10 افراد ہسپتال کے ایمرجنسی یونٹ میں داخل ہوئے اور سیکیورٹی گارڈ اور پولیس اہلکاروں کی موجودگی میں ہی اس نواجوان پر حملہ کردیا۔

عینی شاہد کا کہنا تھا کہ پہلے ان افراد نے لڑکے کو لوہے کی سلاخوں سے تشدد کا نشانہ بنایا اس کے بعد اسے گھسیٹے ہوئے دوسرے کمرے میں لے گیا جہاں اسے مزید تشدد کا نشانہ بنایا۔

اس موقع پر لڑکے کے ساتھ موجود خواتین ان افراد سے لڑکے کو چھوڑنے کی منتیں کرتی رہیں لیکن انہوں نے ان کی ایک بات نہ سنی۔اس نے یہ بھی بتایا کہ صورتحال کو گھمبیر دیکھتے ہوئے ایک دوسرے مریض کی تیمارداری کے لیے موجود شخص نے مدد کے لیے پولیس کو بلالیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں