قریشی کی قبل از وقت چین کی حکمت عملی ظاہر کرنابڑی غلطی ،بھارت بڑے حملےکےلئے تیار،فیصل محمد

برسلز(مانیٹرنگ ڈیسک) بین القوامی تنازعات میں ثالثی کے عالمی ماہر فیصل محمد نے عرب خبررساں ادارے سےگفتگو کرتے ہوئے کہا کہ کشمیر پر بھارت کی جانب سے غاضبانہ حملے پر پاکستان کی جانب سے ردعمل انتہائی ناقص اور کمزور ہے اگر پاکستان نے اس حوالے سے جارحانہ سفارتی اور سیاسی ردعمل نہ دکھایا تو بھارت اگلے ماہ آزاد کشمیر پر جارحانہ کارروائی کرسکتا ہے ۔

انھوں نے پاکستان کی موجودہ حکومت نے دونوں بڑی اپوزیشن پارٹیوں کو بدعنوان اور ملک دشمن قرار دینے کیلئے عالمی سطح بہت کام کیا اور اب ان ہی جماعتوں کے بڑے رہنمائوں کی قیادت میں پاکستان کی حمایت کیلئے وفود بیرون ممالک روانہ کرناپاکستان کے بیانیہ کو مزید کمزور کرنے کے مترادف ہے۔

فیصل محمد نے انکشاف کیا کہ پاکستان کے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے دورہ چین کے دوران ہی چین کی جانب سے حکمت عملی کو وقت سے پہلے ظاہر کرکے بھارت کو اس حوالے سے نہ صرف سفارتی تیاری کا موقع دیا بلکہ چین کو بھی بیک فٹ پر کردیا۔
مزید یہ بھی پڑھیں
پاکستان کا بیانیہ کمزور،کشمیر میں بھارتی جارحیت اسرائیل مودی گٹھ جوڑ،امریکہ کوٹریپ کیا گیا،فیصل محمد

فیصل محمد کے مطابق پاکستان کو اس حوالے پس پردہ جارحانہ سرپرائز ڈپلومیسی کا طریقہ کار اپنانا ہوگا کیونکہ بھارت اس حوالے سے اسرائیل کے ساتھ مل کر پس پردہ اہم مراحل طے کررہا ہے ۔۔۔۔

عالمی مصالحت کار فیصل محمد نے اپنے بیان میں کہا کہ پاکستانی حکومت کسی بھی غلط فہمی میں نہ رہے ۔ بھارت پاکستان کےخلاف کئی چالیںآزمانے کی تیاریاں کررہا ہے جس میں مقبوضہ کشمیر میں پلوامہ طرز کا فالز فلیگ جھڑپ سمیت آزادکشمیر میں کسی بڑے حملہ اورپاکستان میں کسی بڑے سیاستدان کو نشانہ بنا کر پاکستان کو مزید پیچھے دھکیلنا شامل ہے ۔
مزید یہ بھی پڑھیں
بھارت نے مقبوضہ کشمیر میں اسرائیلی طرز پر آپریشن کا فیصلہ کرلیا،فیصل محمد

اپنا تبصرہ بھیجیں