آزادکشمیر اورپاکستان کے صحافیوں کا بھرپور احتجاج ، چکوٹھی کی فضاء بھارت کےخلاف نعروں سے گونج اُٹھی

مظفرآباد(سٹیٹ ویوز)آزاد کشمیر اورپاکستان کے صحافیوں کا کاروان چکوٹھی لائن آف کنٹرول کے قریب پہنچ گیا ۔ چکوٹھی کی فضا بھارت کےخلاف نعروں سے گونج اُٹھی ۔ قافلہ چناری پہنچنے پر ایل او سی انتظامیہ نے روکاوٹیں کھڑی کر کے صحافی مارچ کو چکوٹھی زیرو پوائنٹ پر جانے سے روک دیا۔
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم کےخلاف دنیا بھر میں لوگ سراپا احتجاج ہیں ۔ سینٹرل یونین جرنلسٹ مظفرآباد کی کال پر آزادکشمیر اورپاکستان کے ملک بھر سے صحافیوں کی بڑی تعداد بھارت کےخلاف سراپا احتجاج ہے ۔ مقبوضہ کشمیر میں صحافیوں پر بھارتی فوج کے تشدد اورقتل عام کےخلاف سینکڑوں صحافی لائن آف کنٹرول پر پہنچ گئے جہاں پوری وادی بھارت مخالف سے گونج اُٹھی ۔

مظاہرین کا کہنا ہے کہ بھارت مقبوضہ کشمیر میں عالمی انسانی حقوق کی تنظیموں اورصحافیوں کو جانے کی اجازت دے تاکہ دنیا کے سامنے وادی کی خطرناک صورتحال سامنے آسکے ۔ مقبوضہ وادی میں بیس دن سے بھارتی فوج کی جانب سے نافذ کرفیو کے باعث ادویات اورکھانے پینے کی اشیاء بالکل ختم ہوچکی ہیں ۔ اقوام متحدہ اور عالمی برادری فوری نوٹس لے کر بھارت کو کرفیو نرم کرنے پر مجبور کرے تاکہ بچوں اوربیمار بزرگ اورخواتین کےلئے ادویات پہنچ سکیں۔ بچوں کےلئے خوراک پہنچ سکے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں