آزادکشمیر ریڈ کریسنٹ سوسائٹی میں انتظامی بحران ,نیشنل ہیڈ کوارٹر نے تمام منصوبے تحویل میں لے لیے

اسلام آباد(سٹیٹ ویوز) پاکستان ریڈ کریسنٹ سوسائیٹی ہیڈ کوارٹر نے آزاد کشمیر میں جاری تمام منصوبے اپنی نگرانی میں لے لیے ہیں۔ ڈیزاسٹر مینجمنٹ، فرسٹ ایڈ، بارودی سرنگوں کے خطرات سے آگاہی،کمیونیکیشن، خاندانی روابط کی بحالی اور برانچ ڈویلپمنٹ جیسے تمام پروگرام جو اس سے قبل آزادکشمیر ریڈ کریسنٹ سوسائیٹی چلا رہی تھی اب یہ منصوبے نیشنل ہیڈ کوارٹر نے آزادکشمیرسوسائیٹی سے واپس لے لیے ہیں جبکہ آزادکشمیر کے چار اضلاع میں چھبیس کروڑ روپے مالیت کا منصوبہ V2R کا کنٹرول ہلالِ احمر نیشنل ہیڈ کوارٹرز پہلے ہی سنبھال چکاہے۔

معلوم ہوا ہے کہ آزادکشمیر میں جاری یہ پراجیکٹس ہلالِ احمر آزاد کشمیر برانچ کے چیئرمین سردار محمود اور سیکرٹری راجہ شعیب کی طرفسے خلاف قوائد بھرتیاں کرنے، ذاتی چپقلش اورادارتی قوانین کی خلاف ورزی، اور ڈونرز کے تحفظات کے باعث گزشتہ 3مہینوں سے بند تھے اور سٹاف کی تنخواہیں بھی ادا نہیں کی جارہی تھیں۔ واضح رہے کہ چیئرمین اور سیکرٹری آزاد کشمیر برانچ کیجانب سے سٹاف کی تقرریوں کے معاملے میں مبینہ طور پر ایچ آر پالیسی کے خلاف اقدامات کی وجہ سے ڈونرنے تحفظات کا اظہار کیا تھا۔نیشنل ہیڈ کوارٹر کی طرف سے بتایا گیا ہے کہ ہلال ِاحمر نیشنل ہیڈکوارٹرز نے تمام ڈونر پراجیکٹس کو آزاد کشمیر کے عوام کے وسیع تر مفاد، لائن آف کنٹرول کے مکینوں کو فوری امداد کی فراہمی یقینی بنانے اورشفافیت لانے کے لیے آزاد کشمیر کے تمام پراجیکٹس کو اپنی نگرانی میں لے لیا ہے اور اس فیصلہ پر ڈونرز سے بھر پور اعتماد کا اظہار کیا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں