اقوام متحدہ نے بلوچستان پولیس کو نئی گاڑیاں اور ہتھیار فراہم کردیے

کوئٹہ(نیوزڈیسک)انسپکٹر جنرل آف پولیس (آئی جی) محسن حسن بٹ نے کہا ہے کہ بلوچستان پولیس کی استعداد کار بڑھانے اور انہیں جدید خطوط پر تربیت دینے کے لیے تمام اقدامات اٹھائے گئے ہیں۔آئی جی نے کہا کہ بلوچستان پولیس کو دہشت گردوں سے مقابلہ کرنے کے لیے جدید ساز و سامان سمیت ہتھیاروں کی تربیت دی گئی۔

قومی روزنامےمیں شائع رپورٹ کے مطابق منشیات اور جرائم پر اقوام متحدہ کے ادارے کی جانب سے فراہم کردہ گاڑیوں اور ہتھیاروں کا جائزہ لیتے ہوئے انہوں نے بتایا کہ اب بلوچستان پولیس پیشہ ورانہ طریقے سے جرائم پیشہ عناصر کا مقابلہ کرسکے گی۔آئی جی محسن بٹ نے بتایا کہ ’بلوچستان پولیس کو نئی گاڑیوں، دھماکے یا کسی بھی جرائم اور دہشت گردی کی صورت میں وقوعہ سے شواہد اکٹھے کرنے کے لیے آلات کی ضرورت تھی‘۔

پاک فوج اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ’بلوچستان میں پولیس کا نظام موثر ہورہا ہے اور اب ہم عوام کی جان و مال کے تحفظ کی بھرپور صلاحیت رکھتے ہیں‘۔آئی جی نے بتایا کہ جدید آلات کی عدم دستیابی کی وجہ سے متعدد مرتبہ وقوعہ سے شواہد ضائع ہوئے اور پولیس اور تفتیشی اداروں کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑا لیکن ’اب ہم جائے وقوع سے شواہد جمع کرنے کی قابلیت رکھتے ہیں‘۔

اپنا تبصرہ بھیجیں