Mehmood khan

ڈی آئی خان کا نام اسلام آباد رکھ لیتے ہیں—پی ٹی آئی کی مولانا فضل الرحمن کو پیش کش

پشاور(مانیٹرنگ ڈیسک ) وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا محمودخان نے واضح کیاہے کہ بشام جلسے میں کہی اپنی بات پر آج بھی قائم ہوں،جے یوآئی کو جلوس نہیں گزارنے دینگے ۔وزیراعلیٰ نے ایک مرتبہ پھر ہڑتال کرنیوالے ڈاکٹرزکودعوت دیتے ہوئے کہاہے کہ حکومت انکے ساتھ بیٹھنے کیلئے تیار ہے لیکن وہ اپنی ہڑتال ختم کرے تاہم اس عمل کو حکومت کی کمزوری نہیں سمجھاجائے اورنہ ہی کوئی کمزوری دکھائے گی۔

وزیر اعلی خیبر پختونخوا نے ذیابیطس سے متعلق پروگرام سے خطاب میں کہاکہ میں بشام جلسے میں کہی اپنی بات پر قائم ہوں کہ مولانا کے جلسے کو گزرنے نہیں دونگا۔مولانا آپ بے روزگار ہو چکے ہیں کے پی حکومت اپ کو جاب دینے کے لیے تیار ہے اگر اپ کو اسلام آباد جانا ہے تو ڈی آئی خان کا نام اسلام آباد رکھ لیتے ہیں۔انہوں نے کہاکہ ہمارا 126 دن کا دھرنا ٹھوس شواہد یعنی 4حلقوں اور پانامہ پر تھا اپ(مولانا) کے پاس کیا ہی مولانا اپ کس اسلام کی بات کرتے ہیں کپتان نے یواین میں اسلام کااصل چہرہ پیش کیا ہے –

انہوں نے ڈاکٹروں سے درخواست کی کہ وہ ہڑتال ختم کرے اور نوکریوں پر آ جائیں حکومت کمزور نہیں لیکن ہم اس مسئلے کو حل کرنا چاہتے ہیں ہیلتھ اتھارٹی کے قیام سے ہسپتالوں کی کسی قسم کی نجکاری نہیں ہو گی ڈاکٹرزہسپتال ا ٓجائیں حکومت آپکے ساتھ بیٹھنے کے لیے تیار ہے انہوں نے کہاکہ نظام کی خامیوں کو دور کر کے اصلاحات چاہتے ہیںکپتان ماضی میں وسیم اکرم کو جسطرح میچ کے لیے دوڑاتے تھے آج ویسے ہی ہمیں عوام کے مسائل کے حل کے لیے دوڑاتے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں