غازی ملت پریس کلب راولاکوٹ نو تعمیر شدہ عمارت میں منتقل

راولاکوٹ‌(سٹیٹ‌ویوز) غازی ملت پریس کلب ( رجسٹرڈ ) راولاکوٹ ڈسٹرکٹ کمپلیکس میں نو تعمیر شدہ جدید عمارت میں منتقل کردیا گیا اور راولاکوٹ کے صحافیوں کو بالآخر نو سال کے طویل عرصہ بعد چھت میسر آگئی ، منگل کو پریس کلب کی نئی عمارت میں دعائیہ تقریب سے سرگرمیوں کا باضابطہ آغاز کردیا گیا ، ممتاز عالم دین مفتی عبدالخالق خان نے دعا کروائی ، واضح رہے کہ غازی ملت پریس کلب راولاکوٹ 1995میں تعمیر کیا گیا اور اس کا باضابطہ افتتاح اس وقت کے وزیر اعظم سردار عبدالقیوم خان نے10جون 1997کو کیا گیا تھا –

2005کے زلزلہ میں جب دیگر عمارتیں منہدم ہو گئی تو یہاں عارضی طور پر قیدیوں کو منتقل کیا گیا اور بعد میں امدادی اشیاءکے ذخیرہ کیلئے بھی پریس کلب کی عمارت کو استعمال کیا جاتا رہا ، پھر اس عمارت میں ڈپٹی کمشنر پونچھ بھی رہائش پذیر رہے ، 2010ءمیں ڈسٹرکٹ کمپلیکس کی تعمیر کے وقت پریس کلب کی عمارت مسمار کردیا گیا تھا ، 2010ءسے 2019ءتک راولاکوٹ کے صحافیوں کو پریس کلب کی عمارت نہ ہونے کے باعث شدید مسائل کا سامنا تھا ، اس موقع پر غازی ملت پریس کلب کے صدر اعجاز قمر ، سابق صدور سردار نذر محمد خان ، سردار عبدالرزاق ، عابد صدیق ، سردار راشد نذیر ، سردار ریاض شاہد ، سنیئر صحافی راجہ عزیز کیانی ، سردار محمد سہیل خان، سابق جنرل سیکرٹری عامر حنیف ، سنیئر نائب صد رخورشید بیگ ، جنرل سیکرٹری ظفر نذیر ، سیکرٹری اطلاعات محمد فاروق دیگر صحافی اعجاز صدیقی ، زاہد بشیر ، احسان الحق ،راجہ افضل کیانی ، مسعود حنیف اور دیگر بھی موجود تھے، میونسپل کارپوریشن کے سنیٹری انسپکٹر سردار رحیم خان نے تقریب کے انتظامات میں خصوصی معاونت کی –

دعائیہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے صدر پریس کلب اعجاز قمر نے کہا کہ اللہ پاک کا لاکھ لاکھ شکر ہے کہ نو سال کے عرصہ کے بعد صحافیوں کو چھت میسر آئی ہے اس کی تعمیر کیلئے حکومت آزادکشمیر ، ایرا، سیرا کے حکام بالخصوص اس وقت پروگرام منیجر ڈی آر یو راولاکوٹ راجہ طارق کے شکر گزار ہیں جنہوں نے پریس کلب کی عمارت کو منصوبہ میں شامل کیا ، پریس کلب کی عمارت کی حوالگی کے سلسلہ میں کمشنر پونچھ چوہدری محمد رقیب ، ایس ای تعمیرات عامہ خواجہ محمد سجاد ، ڈویژنل ڈائریکٹر محکمہ تعلقات عامہ سعداللہ بھٹی کے بھی شکر گزار ہیں جنہوں نے بہترین کردار ادا کرتے ہوئے معاملات کو یکسو کیا ،غازی ملت پریس کلب کی نو تعمیر شدہ عمارت میں منتقلی کے بعد نہ صرف صحافیوں کے مسائل میں کمی واقع ہو گی-

بلکہ ان کی استعداد کار میں اضافہ کے ساتھ ساتھ اداروں اور عام لوگوں کے مسائل حل کرنے میں بھی مدد ملے گی ، نو تعمیر شدہ پریس کلب کو جدید خطوط پر استوار کرنے کیلئے خطیر فنڈز اور وسائل کی ضرورت ہے جس کیلئے مختلف اداروں اور حکومت سے معاونت لی جائے گی، پریس کلب کی نو تعمیر شدہ عمارت کا باضابطہ افتتاح جلد کروایا جائے گا ، اس موقع پر مفتی عبدالخالق خان نے دعائیہ کلمات میں کہا کہ راولاکوٹ کے صحافیوں نے ہمیشہ مثبت اور عوامی صحافت کے پرچار کیلئے قربانیاں دیں اور اس خطہ کے مسائل کے حل ، تعمیر ترقی میں ہمیشہ بنیادی کردار ادا کیا ، مثبت رحجانات کو پروان چڑھانے کیلئے راولاکوٹ کے صحافیوں کا موثر عمل دخل رہا جس پر تمام صحافی مبارکباد کے مستحق ہیں ، نئی عمارت میں منتقلی کے بعد صحافیوں کے مسائل میں بھی کمی واقع ہو گی ،تقریب میں ملکی سلامتی، مقبوضہ کشمیر کی آزادی ، بیس کیمپ کی تعمیر وترقی ، خوشحالی کی دعائیں کی گئیں ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں