ایمان احمد اپنے اعزاز کو برقرار رکھنے میں نا کام

ممبئی: (مانیٹرنگ ڈیسک ) دنیا کی سب سے وزنی خاتون ایمان احمد جو کے مصر سے تعلق رکھتی ہیں جلد ہی اپنے اعزاز کو کھونے والی ہیں۔

بھارتی اخبار ٹائمز آف انڈیا کی رپورٹ کے مطابق علاج کی غرض سے مصر سے ہندوستان کے سیفی ہسپتال لائی جانے والی ایمان احمد کا وزن 1 ماہ میں 120 کلوگرام تک کم ہوچکا ہے۔ سیفی ہسپتال میں ایمان احمد کا کیس دیکھنے والے ڈاکٹر مفضل لکڑاوالا کا کہنا ہے کہ وہ مریضہ کی جینیاتی ٹیسٹ رپورٹ کے انتظار میں ہیں جس کے بعد انہیں معدے کی سرجری کے عمل سے گزارا جائے گا۔

یاد رہے کہ گذشتہ ماہ 11 فروری کو وزنی خاتون ایمان کو مصر سے کارگو طیارے کے ذریعے ہندوستان بھیجا گیا تھا اور انہیں گھر سے ایئرپورٹ منتقل کرنے کے لیے کرین کی مدد لینا پڑی تھی۔ سیفی ہسپتال کے ڈاکٹرز کے مطابق گذشتہ ایک ماہ کے دوران ایمان احمد کی صحت میں واضح بہتری سامنے آئی ہے تاہم اس دوران انہیں فالج کے متعدد دورے پڑے۔ ڈاکٹرز پرامید ہیں کہ خاتون کے وزن میں مزید کمی کے بعد جب وہ ایم آر آئی مشین میں جانچ کے قابل ہوں گی تو ان فالج کے حملوں کی وجہ تلاش کی جاسکے گی۔

اس وقت میڈیکل ٹیم وزنی ترین خاتون کی جانچ کے لیے پورٹیبل ایکس رے مشین استعمال کررہی ہے۔ وزن میں 120 کلوگرام کمی کے بعد خاتون کو کھانے پینے میں لاحق مسائل بھی کافی حد تک کم ہوچکے ہیں اور اب وہ واضح گفتگو کرپارہی ہیں۔ ڈاکٹرز کو امید ہے کہ وہ بہت جلد اپنے پیروں پر بھی کھڑی ہوجائیں گی۔ خیال رہے کہ ایمان احمد 25 سال سے ہلنے جلنے اور گھر سے نکلنے سے قاصر ہیں

کیٹاگری میں : فن