سردار محمد طاہر تبسم سے مفتی گلزا ر نعیمی کی ملاقات،ماہ ربیع الاول میں بھائی چارے کا فروغ وقت کی اہم ضرورت قرار

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر)جماعت اہل حرم پاکستان کے صدر اور قومی اقلیتی کمیشن کے رکن ممتاز عالم دین مفتی گلزار احمد نعیمی نے کہا ہے کہ ملک میں دینی اقدار اور مذہبی بقائے باہمی کے فروغ کے لئے حکومت سنجیدہ کوششیں کر رہی ہے۔

ماہ ربیع الاول کے دوران عفو و درگزر، رواداری اور بھائی چارہ کو فروغ دینے کی ضرورت ہے۔ وہ آج امن اور ہم آہنگی کے لئے سرگرم تھنک ٹینک انسٹی ٹیوٹ آف پیس اینڈ ڈیویلپمنٹ انسپاڈ کے صدر اور سفیر امن ڈاکٹر سردار محمد طاہر تبسم اور پیٹریاٹک ایسوسی ایشن آف پرائیویٹ سکولز PAPS کے بانی چیر مین سید عارف حسن سے بات چیت کر رہے تھے جماعت اہل حرم یوتھ ونگ کے مرکزی رہنما طلحہ زبیر بھی ملاقات میں موجود تھے۔

مفتی گلزار احمد نعیمی نے کہا کہ اسلام ھمیں برداشت، مذہب و ملک سے محبت اور بردباری کا درس دیتا ہے مسالک اور فرقوں کے درمیان مفاہمت اور ہم آہنگی وقت کی اہم ضرورت ہے۔ کئی عناصر ملک میں فروعی تنازعات کو ہوا دینے کی کوشش کر رہے ہیں ان حربوں کو کبھی کامیاب نہیں ہونے دیں گے اس کے لئے قومی یک جہتی اور اتحاد کی اشد ضرورت ہے ۔

ان رہنمائو ں نے انہیں 31 اکتوبر کو نشان انسانیت ایوارڈز کی تقریب میں شرکت کی دعوت دی جس میں وفاقی وزیر مذہبی امور ڈاکٹر پیر نور الحق قادری اور اہم قومی شخصیا ت شرکت کریں گی اس تقریب کا اہتمام انسپاڈ اور PAPS نے مشترکہ طور پر کیا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں