جنوبی کوریا ، کسینو سے 1 کروڑ 30 لاکھ ڈالر چوری ،ملائیشین خاتون کے ملوث ہونے کا انکشاف

پیانگ یانگ(مانیٹرنگ ڈیسک)جنوبی کوریا کے ایک کسینو سے پاکستانی 2 ارب 8 کروڑ 52 لاکھ روپے کی بڑی چوری کی واردات ہوئی ہے۔

غیر ملکی خبررساں ادارے کے مطابق جنوبی کوریا کے مشہور ریزورٹ کے کسینو میں چوری کی بڑی واردات ہوئی رپورٹ ہوئی جس میں کسی اور نے نہیں بلکہ اسی کسینو کی ہی خاتون انچارج نے ایک کروڑ 30 لاکھ ڈالر جو (2 ارب 8 کروڑ 52 لاکھ) پاکستانی روپے کی چوری کی۔

جنوبی کوریا کی پولیس کی جانب سے خاتون کی تلاش جاری ہے جو کسینو کی فنڈ انچارج تھی اور اس کا تعلق ملائیشیا سے ہے جو گزشتہ ماہ چھٹیوں پر جانے کے بعد واپس نہیں آئی تاہم معاملے کی تحقیقات کی جارہی ہیں اور جلد خاتون تک رسائی حاصل کرلی جائے گی۔

پولیس کا کہنا ہے کہ اتنی بڑی نقد رقم لے جانا ممکن نہیں کیوں کہ اس کا وزن تقریباً 280 کلو بنتا ہے جو کسی کےلیے اکیلے لے جانا ممکن نہیں ہے اور ہم نے سیکیورٹی کیمروں کی مدد بھی حاصل کی لیکن فوٹیج سے وہ حصہ ڈیلیٹ کردیا گیا ہے جس میں پیسے غائب کیے گئے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں