بیرسٹر سلطان پارٹی میں اختلافات کم کرنے کیلیے سیف اللہ نیازی کی بنائی گئی تنظیم کے سوان دفتر پہنچ گئے

اسلام آباد(سٹیٹ ویوز) پاکستان تحریک انصاف آزادجموں وکشمیر کے صدر اور سابق وزیراعظم بیرسٹر سلطان محمود چودھری نے مرکزی پبلک سیکرٹریٹ سوہان اسلام آباد آفس میں قائم پی ٹی آئی کے پبلک سیکرٹریٹ کادورہ کیا جہاں انہوں نے پارٹی کی سینیئر لیڈرشپ کے ساتھ الیکشن کی حکمت عملی اور پارٹی کو متحد رکھنے کے حوالے سے تبادلہ خیال کیا۔

بیرسٹر سلطان محمود چوہدری نے طویل مدت بعد اس دفتر کا دورہ کیا جو سیف اللہ نیازی خان نے آزادکشمیر میں اپنی مرضی سے بیرسٹر سلطان کے خلاف بنائی تھی اور بیرسٹر اس دفتر جانے سے مسلسل انکاری تھے۔ گزشتہ دنوں وزیر اعظم عمران خان نے سردار تنویر الیاس خان کو آزادکشمیر کی سیاست میں متحرک کردار ادا کرنے کیلیے ذمہ داری دی اور ساتھ یہ ٹاسک دیا تھا کہ آزادکشمیر میں پارٹی مضبوط کریں۔ سردار تنویر الیاس خان اس بات پر زور دیتے رہے کہ آزادکشمیر میں پارٹی سے گروپنگ ختم کی جائے۔

بیرسٹر سلطان نے آج سوان آفس دورے کے موقع پر کہا کہ نون لیگ اور پی پی پی کے مشترکہ کرپشن بچاؤ اتحاد کو عبرت ناک شکست سے دوچار کرنے کے لیے پارٹی کو بھرپور تیاری کے ساتھ الیکشن مہم شروع کرنی ہے اور ان جماعتوں کے دوغلی پالیسیوں اور عوام دشمن اقدامات کو عوام کے سامنے بے نقاب کرنا ہوگا۔ دوسری جماعتوں سے بھی بڑی تعداد میں لوگ مستعفی ہوکر پی ٹی آئی میں شامل ہورہے ہیں۔ پی ٹی آئی حکومت بنانے کی پوزیشن میں آچکی ہے لیکن ہم کسی کرپٹ شخص کو پارٹی میں شامل نہیں کریں گے۔

اس موقع پر ایڈیشنل جنرل سیکرٹری راجہ منصور خان ، سیکرٹری اطلاعات ارشاد محمود ،ڈپٹی سیکرٹری جنرل سردار محمد اسرائیل خان قاضی, سیکرٹری مالیات ذوالفقار عباسی، سردار مرتضی علی طاہر اور دیگر نے خوش آمدید کہا۔اس موقع پر نائب صدرچودھری اظہر صادق، نائب صدر اور سردار امتیاز خان۔مرکزی ڈپٹی سیکرٹری اطلاعات آزاد کشمیر راجہ شجاعت۔ سابق سیکرٹری جنرل پی ٹی آئی گلف راجہ راشد و دیگر بھی موجود تھے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں