آزادکشمیر اسمبلی اجلاس میں 15 ویں آئینی ترمیم کے بحائے کشمیر پر قرارداد پیش کی جائے گی

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر) قانون سازاسمبلی کے سامنے آنے والے ایجنڈے کے مطابق آج اجلاس میں ججز سے متعلق ترمیم ایجنڈے کا حصہ نہیں ہے۔اپوزیشن لیڈرچوہدری یاسین۔ممبران اسمبلی عبد الرشید ترابی۔پیر سید علی رضابخاری اورسحرش قمر کی کشمیرپر قراردادہوگی اورسردارصغیر خان کیجانب سےچوہدری عزیزسے سڑکوں پراخراجات سے متعلق سوالات اورچوہدری عزیز کی جانب سےان کے جوابات ہونگے۔

یاد رہے کہ حکومت آزاد کشمیر نے گذشتہ روز کابینہ کے اجلاس میں سپریم کورٹ اور ہائی کورٹ میں ججز تعینات کرنے کے لئے آئینی ترمیم منظور کی تھی۔ی

ہ ترمیم عبوری آئین کے آرٹیکل 41 اور 42 میں ہونا تھی اور عبوری طور پر 2 ماہ کے لئے وزیراعظم پاکستان کے بحثیت چیئرمین کشمیر کونسل اختیارات صدر ریاست کو منتقل کئے جانے تھے تاکہ ججز تعینات کئے جاسکیں۔رات گئے حکومت پاکستان نے حکومت آزادکشمیر کو ترمیم کرنے سے روک دیا تھا۔

خیال ظاہر کیا جارہا تھا کہ حکومت آج دن دو بجے قانون ساز اسمبلی کے اجلاس تک ترمیم کے لئے منظوری لے گی لیکن قانون ساز اسمبلی کا سامنے آنے والا ایجنڈا ظاہر کررہا ہے کہ ترمیم کیلئے منظوری حاصل نہیں کی جاسکی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں