پاکستان میں امریکی موڈرنا ویکسینیشن کا آغاز ، اہم ہدایات جاری

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر)ماس ویکسی نیشن سینٹر ایف نائن پارک میں موڈرنا ویکسین لگانا شروع کر دی گئی ہے۔

نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر (این سی او سی) نے ہدایت کی ہے کہ موڈرنا ویکسین 18 سال یا زائد عمر کے افراد کو لگائی جائے، ورک پرمٹ، ویزہ کے حامل پاکستانی، بیرون ملک تعلیم، کاروبار اور آفیشل کام کیلئے جانے والے بھی موڈرنا ویکسین لگوا سکتے ہیں۔

این سی او سی کے مطابق دل، جگر، ہائی بلڈ پریشر اور ذیابیطس کے مریض بھی موڈرنا ویکسین لگوا سکتے ہیں۔

اعضا کی ٹرانسپلانٹ کے 3 ماہ بعد اور کیمو تھراپی کے 28 روز بعد موڈرنا ویکسین لگوائی جا سکتی ہے، حاملہ اور دودھ پلانے والی ماؤں کو بھی موڈرنا ویکسین لگائی جا سکتی ہے۔

این سی او سی کے مطابق ملک بھر کے دیگر منتخب کورونا ویکسی نیشن مراکز پر کل سے امریکی ویکسین دستیاب ہو گی۔

امریکا سے موڈرنا ویکسین کی 25 لاکھ خوراکیں اسلام آباد پہنچا دی گئیں۔امریکی سفارتخانے کے مطابق موڈرنا ویکسین امریکا کی جانب سے عطیہ کی گئی ہے۔امریکی سفارتخانہ کی ناظم الامور اینجلا پی ایگلر کا کہنا تھاکہ امریکانے کورونا ویکسین پاکستان بھجوائی اور ویکسین پاکستان پہنچنا، باہمی اشتراک داری کے بغیر ممکن نہ تھا۔

انہوں نے بتایا کہ ویکسین پاکستان کے حوالے کر دی گئی ہے جبکہ وبا میں مدد کیلئے پاکستان کو 50 ملین ڈالرزعلیحدہ فراہم کیے تھے تاہم ویکسین کے معاملے پرپاکستان کے ساتھ تعاون جاری رہے گا۔دوسری جانب ایسٹرازنیکا ویکسین کی مزید خوراکیں بھی رواں ماہ ملنے کا امکان ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں