نقطہ نظر/سید محمد مدنی

افغانستان میں بھارت کی ڈوبتی ہوئی سرمایہ کاری اورپاکستان پر بےبنیاد الزامات

پاکستان کے پڑوس افغانستان جہاں اب امن عمل جاری ہے وہاں پاکستان پر بے تہاشہ بے بنیاد الزامات بھی لگنے شروع ہوگئے ہیں دراصل افغانستان میں بھارت کی بھاری انویسٹمنٹ لگی ہوئی ہے اور اب وہ کباڑ سے زیادہ اہمیت نہیں رکھتی

پاکستان نے اپنا پیٹ کاٹ کر کچھ افغانیوں کو پاکستان میں جگہ دی اس کی وجہ افغانستان میں مستقل جنگ ہے اب جبکہ بھارت کا سرمایہ ڈوب رہا ہے تو اپنا غصہ پاکستان پر جعلی خبروں کے حملے کرواکر نکال رہا ہے بھارت افغانستان میں آکر ہی اس لیے بیٹھا تھا کہ امریکہ کی طرح پاکستان اور چین پر نظر رکھے مگر اب بازی ہی الٹی پڑ چکی ہے پاکستان کی سول عسکری قیادت نے دو ٹوک بیان دیا کہ افغانستان دہشت گردی کرواتا ہے وہاں بھارتی عناصر موجود ہیں

پاکستان کی خارجہ پالیسی اب اپنے اصل رنگ میں آچکی ہے اور دبنگ بیانات دے رہی ہے.جب پاکستانی قیادت ازبکستان میں ہے تو پاکستان انٹیلی جنس ایجنسی کا اہم بیان آیا کہ پاکستان میں دراندازی افغانستان سے ہورہی ہے ہمارے جوانوں کو پاک افغان بارڈر پر نشانہ بنایاجارہاہے پاکستان خطے میں بڑے مقصد کے لیے کام کررہاہے یہ بہت اہم بات ہے پاکستان دنیا کو اپنی اصلی پہچان بتا رہا ہے صرف یہی نہیں ازبک میڈیا چینل نے پاکستانی وفد سےخود یہ بھی سوال کیا کہ
‘پاکستان ایشیائی ممالک میں بہت طاقت رکھتا ہے اور بہت اہمیت ہے’ یہ ﷲ کی طرف سے عزت افزائی پاکستان کے نصیب میں لکھی ہے جو نظر آرہی ہے پاک افواج اور پاکستان نے ستّر ہزار جانیں قربان کی ہیں اس جنگ میں اب وقت آچکا ہے کہ پاکستان ترقی کی راہ پر مستقل چلتا رہے مزید یہ کہ بھارت پاکستان کو اکیلا کرنا چاہتا تھا آج خود اکیلا ہو چکا ہے.

.کل مورخہ ١٥/٠٧/٢٠٢١کو افغان سابق نائب صدر امرﷲ صالح نے ایک انتہائی غلط اور بچگانہ ٹوئٹ کیا پاک فضائیہ کے حوالے سے اور یہی نہیں مزید کہ کہ ثبوت میرے پاس ڈیم ایم میں موجود ہیں لیکن ابھی تک سامنے نہ لاسکے مطلب جب کچھ ہے ہی نہیں تو پھر ہو گا کہاں ثبوت یہ بات صرف اتنی ہے کہ یہ لوگ بھارتی زیر اثر کام کرتے رہے ہیں پاکستان میں بھی کچھ ایسے عناصر موجود ہیں جو افغان حکومت کا بیانیہ لے کر چلتے ہیں وہاں کے صدر اشرف غنی کا بیانیہ کہ پاک فوج ظلم کرتی ہے پشتونوں پر جو کہ سر اسر جھوٹ اور غلط بات ہے پاک فوج نے جتنی قربانیاں دی ہیں اس ملک کی حفاظت کی خاطر اس کی مثال کہیں نہیں ملتی ہم ایک ایسی جنگ میں تھے جو ہم پر مسلط کی گئی تھی لیکن اب مزید یہ نہیں ہوگا

بھارت کے عزائم خاک میں مل رہے ہیں بھارت مکمل طور پر ناکام ہوچکا ہے افغانستان جسے وہ پاکستان میں دہشت گردی کے لیے استعمال کرتا تھا اب مزید نہیں ہو سکے اور پاکستان پر بے بنیاد الزام لگا کر فیٹف کی گرے لسٹ میں ڈالنے کا خواب بھی چکنا چور غرض پاکستان کے ایک قدم نے بھارت کی نیندیں اڑا دی ہیں یہ صرف ابتداء ہے پاکستان اب وسطی ایشیا کے ممالک میں تجارت کو فروغ دینے کے لئے ایکٹو ہے وسطی ایشیا کے کچھ ممالک جن کے پاس کوئی بندر گاہ نہیں انھیں پاکستان کی گوادر انتہائی سستی اور بہترین راستہ فراہم کرے گی

اور پاکستان اس لے بدلے معاشی طور پر مستحکم ہوگا اب وقت ہے کہ جیو اسٹریٹجک تھنکنگ سے جیو اکنامک تھنکنگ کی طرف آیا جائے وسطی ایشیائی ممالک سونے روئی تیل اور سستی بجلی سے مالا مال ہیں تصور کریں جب پاکستان وہاں تک مکمل رسائی حاصل کرے گا تو یہاں بھی سستی ترین چیزیں دستیاب ہوں گی جب معیشت مضبوط ہوگی تو پاکستان میں درآمد شدہ مال جو اس وقت بہت مہنگا ہے سستے داموں ملے گا..اس وقت اس خطے میں مفادات کی جنگ جاری ہے جتنے بہترین پتّے پاکستان کے پاس اس وقت ہیں وہ کسی کے پاس نا ہوں گے پاکستان نے اپنے پتّے کھیلنے شروع کر دیئے ہیں..جیسے جیسے پاکستان معاشی طور پر آگے بڑھنے کی کوشش کر رہا ہے ویسے ویسے چیلنجز بھی سامنے آ رہے ہیں مگر یہ معمولی چیلنجز پاکستان نے پار کر لینے ہیں یقین کریں جب پاکستان وسطی ایشیائی ممالک سے تجارت کرے گا تو شائد لوگ بھول جائیں گے.پاکستان اب اپنے ٹریک پر چل پڑا ہے الحمدلله

اپنا تبصرہ بھیجیں