معروف ناول نگار ،محقق اور ادیب طارق اسماعیل ساگرانتقال کرگئے

لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک) معروف جاسوسی ناول نگار ،محقق اور ادیب طارق اسماعیل ساگرکورونا کے باعث انتقال کر گئے۔

تفصیلات کے مطابق طارق اسماعیل ساگر کی عمر 68 برس تھی ، انہوں نے بطور مصنف 72 کتابیں لکھیں جن میں کمانڈو،وطن کی مٹی گواہ رہنا، وادی لہو رنگ، جیسی کتب سر فہرست ہیں۔

ان کی تحریروں میں ملک سے محبت اور پاک فوج کی قربانیوں کا ذکر ان کی تحریروں میں جا بجا ملتا ہے، پاکستان کے گمنام سپاہی نے بھارت میں قید و بند کی صعوبتیں بھی برداشت کیں۔

انہوں نے 20 سے زائد فلموں کی کہانیاں بھی لکھیں ۔ وہ متعدد قومی اخبارات سے بھی منسلک رہے۔ جنوبی ایشیا کے سب سے زیادہ فروخت ہونیوالی کتابوں میں ان کے ناولز بھی شامل ہیں ۔ ان کی نماز جنازہ آج بعد نماز عصر ادا کی جائے گی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں