عدالت نے زیادتی اور قتل کے سزا یافتہ مجرمان کے حق میں فیصلہ دے دیا

کراچی (ویب ڈیسک )عدالت نے زیادتی اور قتل کے ملزمان کی سزائے موت اور عمر قید کا حکم کالعدم قرار دے دیا، ملزمان پر الزام تھا کہ انہوں نے6سالہ بچی کو ذیادتی کے بعد قتل کیا۔

تفصیلات کے مطابق سندھ ہائی کورٹ میں زیادتی اور قتل کے الزام کی سزا کے خلاف اپیل پر فیصلہ دے دیا گیا اپیلٹ بینچ نے ملزمان کی اپیل منظور کرتے ہوئے ماتحت عدالت کا فیصلہ کالعدم قرار دے دیا۔

انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت کی جانب سے ملزمان بشیر کو سزائے موت جبکہ ملزم عبدالمجید کو عمرقید کی سزا سنائی گئی تھی۔ پولیس کے مطابق ملزمان نے دسمبر2011میں 6سالہ بچی سے زیادتی تھی، بچی جوہرآباد تھانے کی حدود میں ایف بی ایریا کی رہائشی تھی۔

بشیر اور عبدالمجید پڑوسی تھے، پولیس نے شک کی بنیاد پر انہیں گرفتار کیا تھا، ان دونوں ملزمان کے پاس وکیل کی خدمات حاصل کرنے کیلئے وسائل نہیں تھے۔

وکیل عدالت نے سرکار کی جانب سے محمد فاروق ایڈووکیٹ کو وکیل مقرر کیا تھا، ملزمان کے خلاف کوئی شہادت نہیں، پولیس نے تشدد سےاعتراف کرایا، اس اعترافی بیان کی کوئی قانونی حیثیت نہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں