عدالت نے علی زیدی کی ضمانت منظور کرتے ہوئے پولیس کو گرفتاری سے روک دیا

انسداد دہشتگردی عدالت نے پاکستان تحریک انصاف کے رہنما علی زیدی کی ضمانت کی درخواست منظور کر لی۔بلدیاتی انتخابات کے نتائج کے معاملے پر ڈی سی آفس کیماڑی میں ڈی آر او کے دفتر میں توڑ پھوڑ اور ہنگامہ آرائی کے الزام میں نامزد علی زیدی انسداد دہشتگردی کی عدالت میں پیش ہوئے اور ضمانت کی درخواست دائر کی۔

انسداد دہشتگردی کی عدالت نے پی ٹی آئی رہنما علی زیدی کی درخواست ضمانت 30 ہزار روپے کے مچلکے کے عوض منظور کرتے ہوئے پولیس کو ملزمان کو 28 جنوری تک گرفتار کرنے سے روک دیا۔
پی ٹی آئی کے بلال غفار، سعید آفریدی اور دیگر پہلے ہی مقدمے میں ضمانت حاصل کر چکے ہیں۔

اس موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے پی ٹی آئی سندھ کے صدر علی زیدی کا کہنا تھا بلدیاتی حکومت کے لیے حافظ نعیم الرحمان سے رابطہ ہے، کل حافظ نعیم الرحمان ہمارے پاس آرہے ہیں، ان سے ملاقات کے بعد معاملات کو حتمی شکل دی جائے گی۔علی زیدی کا کہنا تھا کہ اب پیپلز پارٹی زرداری مافیا ہے، ان سے کوئی بات نہیں ہو گی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں